لیونل میسی کو جیل کی سزا ختم‘ اضافی جرمانہ عائد

بارسلونا(روزنامہ یوکے ٹائمز) اسپین کی عدالت نے ٹیکس فراڈ مقدمے میں لیونل میسی اور ان کے والد کی سزاختم کرتے ہوئےاضافی جرمانہ عائد کردیا۔تفصیلات کےمطابق عالمی شہرت یافتہ فٹبالر لیونل میسی اور ان کے والد کو ٹیکس فراد مقدمے میں دی گئی سزا اسپین کی عدالت نےختم کرکے اضافی جرمانہ عائد کردیا ہے۔لیونل میسی اور ان کے والد پر الزام ہے کہ انہوں نے بیلز، برطانیہ، سوئٹزرلینڈ اور یوراگوئے میں موجود کمپنیوں کا استعمال کرتے ہوئے 2007 سے 2009 تک میسی کی تصاویر کے حقوق سے حاصل ہونے والی 4.16ملین یوروز کی کمائی کا ٹیکس بچایا اور اسی جرم میں 2016 میں ان پر فرد جرم عائد کی گئی تھی۔خیال رہےکہ اسپین کی عدالت نے عالمی شہرت یافتہ فٹبالر کی ٹیکس فراڈ کے خلاف اپیل کو مسترد کرتے ہوئے 21ماہ جیل اور 2.25ملین ڈالر جرمانے کی سزا سنائی تھی۔یاد رہےکہ لیونل میسی اور ان کےوالد نے سپریم کورٹ میں اپیل کی تھی جس کے بعد میسی کے والد کی سزا 15ماہ تک محدود کردی گئی تھی جبکہ فٹبالر کی سزا کو برقرار رکھا گیا تھا البتہ بارسلونا کی عدالت نے جمعے کو دونوں کی سزا کی مدت ختم کرتے ہوئے جرمانے کی سزا سنائی ہے۔واضح رہےکہ اب لیونل میسی کو سابقہ جرمانے کے ساتھ اضافی دولاکھ 52ہزار یوروز اور ان کے والد کو ایک لاکھ 80ہزار یوروز جرمانہ ادا کرنا ہو گا